Home / پاکستان / اسلام آباد / ن لیگ اور جے یو آئی کا یوسف رضا گیلانی کو قائد حزب اختلاف سینیٹ نہ ماننے پر اتفاق

ن لیگ اور جے یو آئی کا یوسف رضا گیلانی کو قائد حزب اختلاف سینیٹ نہ ماننے پر اتفاق

اسلام آباد: اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک کی دو بڑی جماعتوں پاکستان مسلم لیگ ن اور جمعیت علماء اسلام ف نے یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ میں قائد حزب اختلاف نہ ماننے پر اتفاق کرلیا۔

میڈیا ذرائع کے مطابق سیکریٹری جنرل پی ڈی ایم شاہد خاقان عباسی نے جے یو آئی ف کے رہنماء عبدالغفور حیدری سے ملاقات کی ، جس میں نے مسلم لیگ ن کے رہنماء نے پی ڈی ایم سربراہ مولانا فضل الرحمان کی خیریت دریافت کی ،

تاہم ملاقات میں سینیٹ میں قائد حزب اختلاف منتخب ہونے کے بعد کی صورت حال پر خاص طور پر مشاورت کی گئی۔بتایا گیا ہے کہ دونوں رہنماوَں نے یوسف رضا گیلانی کو قائد حزب اختلاف نہ ماننے پر اتفاق کیا جب کہ اس دوران گفتگو میں سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پی ڈی ایم میں شامل تمام جماعتیں پیپلزپارٹی کے رویے سے مایوس ہیں ، اس لیے قائدحزب اختلاف سے متعلق دیگر جماعتوں سے بھی جلد مشاورت کریں گے،

اس موقع پر جے یو ءی رہنماء سینیٹر عبدالغفور حیدری نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی نے باپ سے حمایت مانگ کر سب کو مایوس کیا ، پی ڈی ایم کا سربراہی اجلاس بلاکر آئندہ کی حکمت عملی طے کرنی چاہیے۔دوسری جانب پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماء یوسف رضا گیلانی نے سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر بننے کے بعد اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پی ڈی ایم میں شامل دیگر جماعتوں کو اعتماد میں لینے کا اعلان کردیا ،

ایک پریس میں انہوں نے کہا کہ میرا اپوزیشن لیڈر بن جانا صرف میری ہی نہیں بلکہ پی ڈی ایم کی فتح ہے ، بہت سی جماعتوں نے ہم سے رابطہ کیا اور کہا کہ اپوزیشن لیڈر بننا پیپلز پارٹی کا حق ہے ، ہم چاہتے ہیں کہ پی ڈی ایم قائم رہے ،

پی ڈی ایم کو یقین دلاتا ہوں کہ ہم اکٹھے ہیں ، میں اپوزیشن کو ساتھ لے کر چلوں گا ، پی ڈی ایم کے لوگوں سے ملتا رہوں گا۔پیپلزپارٹی کے رہنما نے کہا کہ مولانا فضل الرحمن نے آصف علی زرداری سے رابطہ کیا اور کہا کہ کسی قسم کا بیان اب نہیں آئے گا لیکن مسلم لیگ (ن) کے ایک سینئر رہنما کی جانب سے بیان آیا کہ یہ سرکاری اپوزیشن ہے ،

پہلے جب پی ڈی ایم نے فیصلہ کیا کہ قومی اسمبلی سے سینیٹ سیٹ پر میں امیدوار ہوں گا ، اس پر ہم نے سب کے ساتھ مل کر کامیابی حاصل کی ، ہمارا موقف تھا کہ پارلیمنٹ کے اندر اور باہر اپنا کردار ادا کریں گے ، جلسے، ریلیاں اور احتجاج مل کر کرنا تھا ،

پی ڈی ایم نے ہماری تجویز مان کر سینیٹ اور ضمنی انتخابات میں حصہ لیا ، پی ڈی ایم نے ضمنی انتخابات جیت لیے ، بلاول بھٹو کی تجویز تھی کہ عدم اعتماد لائی جائے، استعفوں کو آخری آپشن رکھا جائے۔

About Mubashir Rehman

Check Also

Journalist Imran Riaz Khan arrested from Islamabad Toll Plaza

صحافی عمران ریاض خان اسلام آباد ٹول پلازہ سے گرفتار

سینئر صحافی عمران ریاض خان کو اسلام آباد ٹول پلازہ سے گرفتار کرلیا گیا۔ اے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *