Home / پاکستان / پاکستان میں مہنگائی بڑھے گی،عالمی ایجنسی کی رپورٹ نے حکومتی پالیسیوں کا بھانڈہ پھوڑ دیا

پاکستان میں مہنگائی بڑھے گی،عالمی ایجنسی کی رپورٹ نے حکومتی پالیسیوں کا بھانڈہ پھوڑ دیا

   پاکستانیو! گھبرانا نہیں ہے سے لے کر میں ان کو رلاﺅں گاتک……کئی ایسے لالی پاپ ہیں جو پی ٹی آئی حکومت نےالیکشن سے پہلے اور بعد میں اپنی قوم کو دیے۔پاکستانی قوم کے نصیب ہی ایسے پھوٹے ہیں کہ جو بھی حکمران آتے ہیں وہ اپنے اللے تللوں میں ایسے محو ہوتے ہیں کہ کبھی پلٹ کرووٹ دینے والوں کا حال بھی نہیں پوچھتے۔سادگی کا پرچار کرنے اور ایک روٹی کھانے کا مشورہ دینے والی پی ٹی آئی کی حکومت کے وزرا کی چال ڈھال میں کہیں سے بھی سادگی نظر نہیں آتی مگر عوام کو کم خرچ کا مشورہ دیا جاتا ہے۔جب سے ڈالر بے لگام ہوا تب سے مہنگائی کا جن اس قدر بے قابو ہو چکا ہے کہ عوام فاقوں پر مجبور ہو چکے ہیں۔رہی سہی کسر بے روزگاری نے پوری کر دی ہے۔

مگر وزیر اعظم عمران خان آج بھی قوم سے خطاب کے دوران یہی راگ الاپتے نظر آتے ہیں کہ گھبرانا نہیں ہے۔حضور!اگر اجازت ہو تو تھوڑا سا گھبرا لیں کیونکہ عالمی ایجنسی فچ کی رپورٹ نے تو ہوشربا انکشاف کر ڈالے ہیں جن پر آپ تو یقین نہیں کریں گے اورقوم کو ایک اور لالی پاپ دینے کی کوشش کریں گے مگر سچ وہی ہے جو فچ کی رپورٹ میں سامنے آ چکا ہے اس رپورٹ پر یقین نہ کرناایسے ہی ہے جیسے بلی کو دیکھ کر کبوتر آنکھیں موند لیتا ہے۔بین الاقوامی کریڈٹ ایجنسی ’فچ‘ نے پاکستان کی معیشت کے حوالے سے کہا ہے کہ کاروباری طبقے کا اعتماد کم ہورہا ہے اور سرمایہ کاری منفی اثر لے رہی ہے۔پاکستان اور آئی ایم ایف کے معاہدے پر تبصرہ کرتے ہوئے فچ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ آئی ایم ایف سے 8 مہینوں کے بعد معاہدہ طے پاگیا ہے،

 آئی ایم ایف پروگرام میں اقتصادی اور مانیٹری پالیسیاں سخت رہیں گی، آئی ایم ایف پروگرام قلیل مدت میں معیشت کے لیے منفی ہوگا۔فچ کے مطابق آئی ایم ایف پروگرام کے بعد اسٹیٹ بینک نے 150بیسسز پوائنٹس بڑھائے ہیں، آئی ایم ایف پروگرام کے وقت ڈالر 142 روپے کا تھا۔رپورٹ میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ پاکستان کی معاشی نمو رواں مالی سال میں 3.2 فیصد رہے گی، مالی سال 2020 میں معاشی نمو 2.7 فیصد رہے گی، مہنگائیبڑھے گی اور قوت خرید کم ہوگی۔فچ کے مطابق معاشی نمو حکومتی ہدف سے کم رہے گی، خام تیل کی قیمتوں کی وجہ سے درآمدات بڑھیں گی، اسٹاک مارکیٹ کا گرنا معیشت پر اعتماد کو کم کررہا ہے، جولائی 2018 سے اسٹاک مارکیٹ 14 فیصد گر کر 2016 مارچ کی سطح پر آگئی ہے۔فچ رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ کاروباری طبقے کا اعتماد کم ہورہا ہے، سرمایہ کاری منفی اثر لے رہی ہے، سی پیک سرمایہ کاری معیشت کو سپورٹ فراہم کرے گا۔

About Junaid

Check Also

The recent rise in inflation is not a domestic but a global problem: Asad Omar

مہنگائی میں حالیہ اضافہ ملکی نہیں بلکہ عالمی مسئلہ ہے: اسدعمر

اسلام آباد : وفاقی وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے ملک میں مہنگائی بڑھنے کا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *