Home / پاکستان / اسلام آباد / سپریم کورٹ نے نجی اسکولوں کی فیسوں میں کیا گیا اضافہ کالعدم قرار دے دیا

سپریم کورٹ نے نجی اسکولوں کی فیسوں میں کیا گیا اضافہ کالعدم قرار دے دیا

اسلام آباد : نجی اسکولوں کا 2017ء کے بعد فیسوں میں کیا گیا اضافہ کالعدم قرار دے دیا گیا ۔ تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ آفپاکستان میں نجی اسکولوں کی فیسوں میں اضافے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ سماعتچیف جسٹس آصف سعید کهوسہ کی سربراہی میں بینچ نے کی۔ 69

صفحات پر مشتمل تحریری فیصلہ جسٹس اعجازالحسن نےتحریرکیا ۔سماعت کے دوران سپریم کورٹ نے نجی اسکولوں کی فیسوں میں اضافے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے 2017ء والی فیس وصول کرنے کا حکم دے دیا۔ نجی اسکولوں کی فیس سے متعلق سپریم کورٹ کا تحریری فیصلہ بھی جاری کر دیا گیا ہے۔ سپریم کورٹ کی جانب سے جاری کیے جانے والے تحریری فیصلے میں کہا گیا کہ نجی اسکول 2017ء والی فیس وصول کرنے کے مجاز ہوں گے۔

والدین سے وصول کی گئی اضافی فیس آئندہ فیسوں میں ایڈجسٹ کی جائے۔نجی اسکولز نے 2017ء کے سے خلاف قانون فیس میں بہت زیادہ اضافہ کیا۔ نجی اسکولز کی فیس وہی ہو گی جو جنوری 2017ء میں تھی۔ فیسوں میں کی گئی 20 فیصد کمی والدین سے ریکور نہیں کی جائے گی۔ 

عدالت نے حکم دیا کہ نجی اسکول قانون کے مطابق اپنی فیسوں کا دوبارہ تعین کریں ۔ عدالتی فیصلے میں کہا گیا کہ فیس کی ری کیلکولیشن کی نگرانی متعلقہ ریگولیٹری اتھارٹی کرے۔متعلقہ ریگولیٹری اتھارٹی کی منظور شدہ فیس والدین لی جا سکے گی۔ سپریم کورٹ کے فیصلے میں ہدایت کی گئی ہے کہ والدین سے لی گئی اضافی فیس آئندہ فیسوں میں ایڈجسٹ کی جائے۔ ریگولیٹرز اسکولوں کی جانب سے وصول کی جانے والی فیس کی نگرانی کریں۔ اسکول فیس شکایات کے ازالے کے لیے شکایتی سیل قائم کیا جائے۔سپریم کورٹ آف پاکستان کے اس فیصلے پر والدین نے بھی اطمینان کا اظہار کیا اور کہا کہ عدالتی فیصلے پر ہم خوش ہیں۔

About admin

Check Also

Journalist Imran Riaz Khan arrested from Islamabad Toll Plaza

صحافی عمران ریاض خان اسلام آباد ٹول پلازہ سے گرفتار

سینئر صحافی عمران ریاض خان کو اسلام آباد ٹول پلازہ سے گرفتار کرلیا گیا۔ اے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *